نیک لوگوں کا ذکر خیر کرنے کی فضیلت

وہ قوم کبھی ترقی نہیں کر سکتی جو اپنے اسلاف میں سے نیک لوگوں کے نقش قدم پر نہ چلے۔ صالحین کا ذکر کرنا خیر و برکت ہے باعث ہے۔ ہمیں اپنی تاریخ کو یاد رکھنا چاہیے اور جہاں جہاں ممکن ہو اپنے اسلاف کا ذکر خیر کرتے رہیں۔ کیونکہ نیک لوگوں کے ذکر کی فضیلت بیان کی گئی ہے۔

صالحین یعنی نیک لوگوں کے ذکر کی فضیلت

جیسا کہ روایت میں ہے :

”عند ذکر الصالحین تنزل الرحمۃ“

یعنی نیک لوگوں کے ذکر کے وقت رحمت نازل ہوتی ہے۔ (1)

آج ہماری جو بدحالی ہے اس کی ایک وجہ یہ بھی ہے کہ ہم نے اپنے اسلاف کی میراث کو گنوا دیا ہے۔ اسی وجہ سے ہم در بدر کی ٹھوکروں کا شکار ہیں۔ اگر آپ آج بھی تاریخ اٹھا کر دیکھیں تو آپ کی آنکھیں کھل جائیں گی کہ جن ممالک کی ترقی کو دیکھ کو ہماری آنکھیں چندھیا جاتی ہیں ان کی ترقی کی پیچھے کہیں نہ کہیں ہمارے اسلاف کے اصول یا انکی ریسرچ موجود ہے۔

گنوادی ہم نے جو اسلاف سے میراث پائی تھی
ثُریا سے زمیں پر آسماں نے ہم کو دے مارا (2)

لہذا ! اپنے اسلاف کی حیات مقدسہ کے روشن ابواب لوگوں کے سامنے بیان کرنا تا کہ وہ بھی ان اکابرین کے نقش قدم پر چلیں، خیر و برکت کا باعث ہے۔ اللہ پاک ہمیں اپنی زبان صالحین کا ذکر کرنے میں استعمال کرنے کی توفیق عطا فرمائے ۔ آمین

5/5 - (2 votes)

حوالہ جات

حوالہ جات
1 کشف الخفاء رقم ۱۷۷۰،ج۲،ص۶۵
2 ڈاکٹر اقبال

توجہ فرمائیں! اس ویب سائیٹ میں اگر آپ کسی قسم کی غلطی پائیں تو ہمیں ضرور اطلاع فرمائیں۔ ہم آپ کے شکر گزار رہیں گے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں